Untold Storiess
Edit
Nikkah & Valentine

Nikkah & Valentine — نکاح اللہ کا حکم

5+
Nikkah
Nikkah & Valentine

نکاح اللہ کا حکم

”جو کوٸی نکاح کرتا ہے تو وہ آدھا ایمان مکمل کر لیتا ہے اور باقی آدھے دین میں وہ اللہ سے ڈرتا رہے“
Prophet's Seal
ارشادِ نبویﷺ ہے
( مشکوة المصابیح کتاب النکاح )

انسانی خواہشات ایک فطری احساس ہے جس سے کوٸی بھی شخص انکاری نہیں ہے۔ اور ان خواہشات کی تکمیل کے لیے اسلام نے انسان کو سب سے خوبصرت اور پاک راستے کی ترغیب دی ہے جسے نکاح کا نام دیا گیا ہے۔ نکاح کے رشتے میں بندھنے کے بعد انسان پر جہاں بہت سی زمہ داریاں عاٸد کی ہیں وہیں یہ رشتہ میاں بیوی بیوی کے درمیان باعثِ راحت و سکون بھی ہے۔ ١ور اسلام نے تو لڑکا اور لڑکی کو عمرِ بالغاں میں پہنچتے ہی نکاح کے بندھن میں باندھ دینے کا حکم دیا ہے۔ مگر افسوس ہمارا معاشرہ خود کو لبرل ظاہر کرنے کے چکر میں اخلاقی پستیوں کا شکار ہو چکا ہے۔ ہم بھی ان مغربی ممالک کے نقشِ قدم پر چلنے کی کوشش کرتے ہیں جن میں شادی شدہ زندگی کا کوٸی  ہی نہیں ہے۔ لیکن یہاں ایک بات جو کہ قابلِ غور ہے کہ جن ممالک میں خاندان اور ازدواجی زندگی کا رجھان نہیں ہے اور شادی کرنے والے لوگوں کو دوسرے درجے کے شہری کہا جاتا ہے۔ان ممالک میں خاندی زندگی مکمل طور پر درم برہم ہو چکی ہے۔ اور  ان کے بھی کچھ لوگ اس پریشانی کا شکار ہیں کہ کیسے اس سوچ سے چھٹکارا حاصل کیا جاٸے۔
اب ہم بھی کچھ اسی راہ پر چل نکلے ہیں
valentines day 

ہو یا نارمل زندگی کے دن ہماری نوجوان نسل بھی مغربی تہزیب سےپیچھے نہیں ہیں۔ لڑکالڑکی کا سرِ عام ملنا معیوب نہیں سمجھا جاتا جسکی وجہ سے شادی سے پہلے زنا کا رجھان بہت زور و شور سے پروان چڑھ رہا ہے۔ جو کہ اسلامی احکامات کی مکمل طور پر خلاف ورزی کرتا ہے۔
ارشادِ ربانی ہے
  ”وہی اللہ ہے جس نے انسان کو پانی یعنی ایک قطرہ بوند سے پیدا کیا اور نسلِ آدم کو چلایا اور اسے خاندان والا بنایا  اور بے شک تمہارا رب بڑی قدرت والا ہے “
آجکل بڑھتی ہوٸی ترقی کے دور میں اگر لڑکا اور لڑکی کم عمری میں ایک دوسرے کو پسند کر لیتے ہیں تووالدین کو چاہیے کہ اپنے بچوں کو گناح سے بچانے کے لیے انہیں جلد از جلد رشتہ ازدواج میں باندہ دیں۔ اور ہماری نوجوان نسل کو بھی چاہیے کہ اپنے جزبات اور احساسات کو قابو میں رکھیں اگر نہیں رکھ سکتے تو نکاح کر لیں سادگی سے ہی سہی۔ لیکن ایک پاک رشتے میں منسلک ہو جاٸیں۔اسلام تو سادگی پسند مزہب ہے اور ہم نے نکاح کو خود اپنے ہاتھوں سے مشکل بھی بنا لیا ہے جس طرح حضورِ اکرمﷺ نے اپنی صاحبزادی کا نکاح کیا اگر ہم اس راہ پر چل نکلیں تو نکاح کے اخراجات نہ ہونے کے برابر ہوں اور ہماری نوجوان نسل بہت سے گناہوں سے بچ سکتی ہے۔ نکاح کو مشکل بنا کر ہم نے اپنی آخرت بھی مشکل بنا ڈالی ہے زنا عام ہو گیا ہے اور باقاعدہ اس چیز کا جشن منایا جاتا ہے
valentines day 

کے دن جو کہ سرا سر گناہ ہے۔ 
اگر کوٸی کم عمری میں نکاح کر بھی لے تو ہم اس کا مزاک بنا رہے ہوتے ہیں یہ بھی بھول جاتے ہیں کہ نکاح کے لیے عمر کی کوٸی قید نہیں کم از کم زنا جیسے گناہ سے تو بچ جاٸیں گے۔   آجکل ہم جس دور کا حصہ ہیں کہ پیار محبت عشق و عاشقی کا ہونا ایک یقینی بات ہے تو بہتر یہی ہے کہ لڑکا لڑکی کو وقت پر نکاح کے رشتے میں باندھ دیا جاۓ بغیر کسی نسلی اور معاشی امتیاز کے۔ 

ہم نے دو محبت کرنے والوں کے لیے نکاح جیسی بہترین چیز کوٸی اور نہیں دیکھی۔
Prophet's Seal
حدیثِ نبوی ہے۔
ابنِ ماجہ۔
A research article by our editor.
Wejiha Chishti
Mehar Fatima
Editor

Nikkah & Valentine -- نکاح اللہ کا حکم

For more related articles related to Islam, visit the link below. 

5+

1 thought on “Nikkah & Valentine — نکاح اللہ کا حکم”

What are your Thought's ..???