Untold Storiess
Defense Day of Pakistan

Defense Day of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان

3+
Defense Day of Pakistan

Defense Day Of Pakistan

یومِ دفاعِ پاکستان

Defense Day Of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان | Urdu Article | By A.F.K |  6 ستمبر۔ یوم دفاع کا دن۔ یہ دن ‘دفاع کا دن’ کیوں کہلاتا ہے؟ شاید اسی لیے کہ اس دن ہندوستان نے ہم پر حملہ کیا تھا اور ہم نے اپنی سرزمین کا دفاع کیا تھا۔پر کیا اس دن ہم نے ‘صرف’ اپنی سرزمین کا دفاع کیا تھا یا اپنی بقاء کا دفاع بھی کیا تھا؟ کیا اس دن ہم اکیلے لڑ رہے تھے یا اللہ کی مدد بھی شامل تھی؟ اگر تھی تو کیسے کی تھی اللہ نے مدد؟ آخر کیا ہوا تھا اس دن؟

آج میں اس دن کے چند مناظر بیان کرنے کی کوشش کروں گی اور امید کروں گی کہ میرے ساتھ آپ بھی اس دن کی یاد کو تازہ کرے گے۔ آج آپ کو بھی اپنی قوم ، اپنی افواج اور اپنی اس سرزمین پر پھر سے فخر ہوگا۔6 ستمبر سن 1965ء اس دن کا آغاز ہی ایک سنسنی خیز خبر سے ہوا جب اس وقت کے وزیراعظم محمد ایوب خان نے ریڈیو پاکستان کے ذریعے سے تقریر کی۔ وہ تقریر یہ تھی۔

میرے عزیز ہم وطنوں السلام علیکم! دس کروڑ پاکستانیوں کے امتحان کا وقت آپہنچا ہے۔ آج صبح سویرے ہندوستانی فوج نے پاکستان کے علاقے پر لاہور کی جانب سے حملہ کیا اور باقی ہوائی بیرے نے وزیرآباد سٹیشن پر ٹھہری ہوئی ایک مسافر گاڑی کو اپنے بزدلانہ حملے کا شکار بنایا۔ پاکستان کی دس کروڑ عوام جن کے دل کی ڈھڑکن میں لا إله إلا الله محمد رسول الله کی صدا گونج رہی ہے۔ اس وقت تک چین سے نہیں بیٹھے گے جب تک دشمن کی توپیں ہمیشہ کے لیے خاموش نہ ہو جائے۔ہندوستانی حکمران شاید ابھی نہیں جانتے کہ انہوں نے کس قوم کو للکارا ہے۔ ہمارے دلوں میں ایمان اور یقین کامل ہے اور ہمیں یہ معلوم ہے کہ ہم سچائی کی جنگ لڑ رہے ہیں۔ ملک میں آج ہنگامی صورتحال کا اعلان کردیا گیا ہے۔ جنگ شروع ہو چکی ہے۔ دشمن کو فنا کرنے کے لیے ہمارے بہادر فوجیوں کی پیش قدمی جاری ہے۔ اللہ تعالٰی نے پاکستان کی مصلح فوجوں کو جوہر دکھانے کا موقع دیا ہے۔ میرے ہم وطنوں آگے بڑھوں اور دشمن کا مقابلہ کرو۔ خدا تمہارا ہامی و ناصر ہو۔ آمین۔ پاکستان پائندہ باد۔

Todaypk, daily Pakistan, today.pk, dailypakistan, bbc urdu Pakistan, e sahulat, today pk, jang.com.pk, jang breaking news, daily jang latest news,

dawn news urdu, daily express urdu, urdu news paper, the news urdu, articles, qaumi akhbar, urdu columns, pak urdu news, daily express (urdu newspaper), jang akhbar, daily express urdu newspaper, hamid mir column, express urdu newspaper, urdu writing online, pak news urdu, daily urdu columns, urdu news point,

Defense Day Of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان

یہ تھی وہ تقریر جو اس وقت کے وزیراعظم نے کی تھی۔ اب ذرا۔۔۔’جنگ شروع ہو چکی ہے۔ اس فقرے پر غور کرتے ہیں۔ یہ واحد فقرہ ریڑھ کی ہڈی میں سنسنی دوڑانے کے لیے کافی ہے۔ مگر کیا اس فقرے نے میری قوم کا حوصلہ پست کیا؟ نہیں جناب یہ فقرہ بھی میری قوم کا حوصلہ پست نہیں کر سکا۔ اس وقت پاکستان کی پوری قوم نعرہ تکبیر لگاتی ہوئی سڑکوں پر نکل آئی تھی۔ یہ تھا میری قوم کا جذبہ۔ وسائل نہیں تھے پر ایمان تھا۔

اب ذرا دشمن کی بات کرتے ہیں۔ دشمن ہم سے پانچ گنا بڑا تھا۔ حملہ بہت شدید تھا کہ تقریبا پانچ پانچ سو ٹینک استعمال کیے گئے۔ تقریباً پانچ سو ٹینک لاہور میں اور پانچ سو کے قریب سیالکوٹ کے اوپر حملے میں استعمال کیے گئے۔ اور یہ دونوں ہمارے سرحدی شہر تھے۔ پاکستان جنگ کے لیے تیار نہیں تھا۔ تو پھر کیسے پاکستان نے اپنا دفاع کیا؟ یہ پہلا سوال ہے جو دشمن کی تعداد سننے کے بعد ذہن میں آتا ہے۔ اور اس سوال کا جواب اس جنگ کے واقعات میں ہی ہیں۔

اگر آپ واقعات سنے تو آپ کو اندازہ ہوگا کہ آخر ہم یہ دن اتنے زور و شور سے کیوں مناتے ہیں۔ آخر کیوں ہم اس دن کو اپنے اسلحے کی نمائش کرتے ہیں۔

چند ایک واقعات کا جو تاریخ میں لکھے گئے ہیں۔ میں ان کا ذکر کروں گی۔

سب سے پہلے میں اپنی افواج کے بہادر جری سپوتوں کا ذکر کروں گی۔

اس وقت کے ایئر چیف نور خان کا ذکر کروں گی۔ ان کے حوصلے کا ذکر کروں گی جب انھوں نے کہا کہ “یہ اسورٹیز نہیں جائے گی۔ جب تک میں خود نہ دیکھ لوں کہ یہ کتنی خطرناک ہے ہمارے پائلٹز کے لیے۔پاکستانی فوج دنیا کی افواج کے مقابلے میں وہ واحد فوج ہے جس میں افسر کیجیولٹی ریٹ زیادہ ہے۔ کیونکہ ہمارے افسر آگے بڑھ کر لیڈ کرتے ہیں۔

میں نیوی کا ذکر کروں گی۔ جس کے پاس اس وقت ایک سنمبرین تھی۔ “غازی۔ ” اس ایک سنمبرین نے پاکستان میں بحری راستے سے دشمن کا داخلہ بند کیا ہوا تھا۔ پاکستان نیوی نے صرف حفاظت نہیں کی بلکہ حملہ بھی کیا تھا۔ پاکستان نیوی آگے بڑھی دوارکہ پہ گئ، دوارکہ کے قلعے کو تباہ کیا اور پھر نکل کر واپس آئی۔اب چند معجزات کا ذکر کرتے ہییں 1965کی جنگ میں ایسے ایسے معجزات دیکھنے کو ملے کہ عقل دنگ رہ جائے۔ چند ایک کا ذکر کروں گی۔

  ایک عینی شاہد کے الفاظ ہے جو میں یہاں درج کروں گی۔

“ایک سیکٹر پر ہماری توپوں کی مدد کی ضرورت پڑی۔ ہماری پیادہ فوج کے مورچے تھے جن پر دشمن کے ٹینکوں کا دباؤ بہت شدید تھا اور ہماری توپوں کی آخری حد سے بھی دو تین کلومیٹر آگے دشمن کے ٹینکوں کی پوزیشن تھی۔ اور جب مدد مانگی گئی تو حساب لگایا گیا کہ ہماری توپوں کے گولے دشمن تک نہیں پہنچ سکتے۔ اور صورتحال یہ تھی کہ اگر اس وقت مدد نا مانگی جاتی تو سیالکوٹ شہر کے ایک سیکٹر پر دشمن قبضہ کر لیتا۔ اللہ کے توکل پر یقین کرے۔ افسروں کی آنکھوں میں آنسوؤں آگئے۔ انہوں نے اللہ کے بھروسے پہ، اللہ کے آسرے پہ یقین کر کے دشمن کی طرف توپوں کا منہ کر کے فائر کیے  اور نا قابل یقین بات ہے۔ تین منٹ کے بعد وائرلیس پہ جو آگے ہمارے مورچے تھے وہاں سے نعرہ تکبیر کی آوازیں آنے لگی۔ نا اس سے پہلے کبھی توپ نے اتنا دور فائر کیا تھا نا اس کے بعد کبھی اتنا دور فائر کیا۔ اس موقع پر جب ضرورت تھی تو اللہ کی طرف سے تائید آئی۔”

ہزاروں واقعات ایسے ہیں۔ یہ باتیں بزرگوں نے کتابوں میں بھی لکھی ہیں آپ ممتاز مفتی کی کتابیں اٹھا کہ دیکھ لیجیے۔ یہ تمام واقعات اس زمانے کے اخبارات میں بھی چھپے ہیں۔

جب دشمن کے طیاروں کو ذمہ داری دی گئی کہ راوی کے پل پر بمباری کرنی ہے۔ تو وہ پائلٹ جب پکڑا گیا۔ تو اس سے پوچھا گیا کہ پل تو تمہارے سامنے تھا تم نے بمباری کیوں نہیں کی؟ تو انہوں نے کہا ‘ہمیں کہا گیا تھا کہ وہاں ایک پل ہے ہمیں چھ پل نظر آ رہے تھے۔’ دشمن کے پائلٹز نے یہ باتیں کہی ہے کہ ہم بمب گراتے تھے، راولپنڈی پہ پینتیس سے چالیس کے قریب بمب گرے مگر اس میں سے چار سے پانچ پھٹے وہ بھی ویرانے میں۔ یہ اللہ کی مدد تھی۔ 

بزرگ کہتے ہیں کہ

“فضائے بدر پیدا کرو۔ ملائکہ آج بھی مدد کے لیے نازل ہونگی۔”

جب بھی مسلمان اللہ اور رسول کے نام پر اس سرزمین کی حفاظت کے لیے کھڑے ہونگے اللہ کی تائید و نصرت آئے گی 1965 کی جنگ اس کی ایک خوبصورت مثال ہے۔

ابھی تو میں نے شہداء کی بات نہیں کی۔ ابھی تو میں نے غازیوں کی بات نہیں کی۔ ابھی تو اس قوم کی ماؤں بہنوں کی بات نہیں کی۔ ابھی تو میں نے اس سرزمین پاک کے لیے قربانیوں کی لازوال داستان شروع ہی نہیں کی۔بات طویل تر طویل ہوتی جارہی ہے۔ اختتام میں بس اتنا ہی کہو گی۔ جب اس وطن کے دفاع کی بات آتی ہے تو جری سپوت یہ نہیں کہتے کہ اس وطن نے ہمیں دیا ہی کیا ہے بلکہ سیسہ پلائی دیوار بن کر اس کا دفاع کرتے ہیں۔

پاکستان اللہ کے رازوں میں سے ایک ہے۔ یہ سرزمین اللہ کے نام پر آزاد ہوئی تھی اور اسی ذات نے ہر قدم پر اس کی حفاظت کی ہے۔جب میں اس وطن کے پرچم کو دیکھتی ہوں تو مجھے لازوال قربانیاں، ان کہی داستانیں یاد آتی ہے۔ ماؤں کی دھائی دیتی آوازیں، اجڑی عورتیں اور یتیم بچے یاد آتے ہیں۔ یہ پرچم ہمیں بہت مشکل سے ملا ہے۔ خدارا اسے گرنے نا دے۔

پاکستان پائندہ باد۔ 

Defense Day Of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان
Urdu Article By
A.F.K
Writer

Defense Day Of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان

More from
# Trending

Click the tabs blow to cheek the latest articles in the same catagory

The Stories Within
The Tsunami of Inflation | مہنگائی کا سونامی
20Oct

The Tsunami of Inflation | مہنگائی کا سونامی

0 The Tsunami Of Inflation مہنگائی کا سونامی The Tsunami Of Inflation | مہنگائی کا سونامی | Urdu Article | By Naeem Ud Din Farooqi | پاکستان میں ہر سیاسی

Quota System In Pakistan | کوٹہ سسٹم
16Oct

Quota System In Pakistan | کوٹہ سسٹم

0 Quota System In Pakistan کوٹہ سسٹم Quota System In Pakistan | کوٹہ سسٹم | Urdu Article | By Neeam Uddin Farooqui |  قیام پاکستان سے لیکر1985 تک کراچی سے

Who will Protect Us? | ہمارا محافظ کون
13Sep

Who will Protect Us? | ہمارا محافظ کون

1+ Who Will Protect Us? ہمارا محافظ کون Who Will Protect Us? | Urdu Article | By A.F.K | میں کیا لکھوں؟ لکھوں بھی کہ نہیں۔ یہ سمجھنے سے میں قاصر

Justice for Marwa | مروہ کو انصاف دو
08Sep

Justice for Marwa | مروہ کو انصاف دو

5+ Justice For Marwa مروہ کو انصاف دو Justice For Marwa | Urdu Article | Meher Fatima |  ستم ظریفی وقت نے کلیوں کی نزاکت کو دلوں کی محبت کو

Defense Day of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان
06Sep

Defense Day of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان

3+ Defense Day Of Pakistan یومِ دفاعِ پاکستان Defense Day Of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان | Urdu Article | By A.F.K |  6 ستمبر۔ یوم دفاع کا دن۔ یہ

Karachi is Drowning – Who is Responsible | استدعا کراچی
03Sep

Karachi is Drowning – Who is Responsible | استدعا کراچی

2+ Karachi Is Drowning – Who Is Responsible استدعا کراچی Karachi Is Drowning – Who Is Responsible | By Ayesha Siddique |  دیگر تمام اشہار میں جب ابر رحمت مہربان

Defense Day Of Pakistan | یومِ دفاعِ پاکستان

Cheek out the Latest Updates from Untold Storiess:

3+

What are your Thought's ..???